یونیسیف: شام میں تنازعات نے بچوں کو مزدوری پر مجبور کردیا

Share on facebook
Share on google
Share on twitter
Share on linkedin


شام میں نو سال قبل شروع ہونے والی خانہ جنگی کے بعد سے اب تک قریب پانچ ملین بچے پیدا ہو چکے ہیں۔

اس تنازعہ کا ان کی زندگیوں پر تباہ کن اثر پڑا ہے ، اور بہت سارے اپنے کنبوں کی کفالت کے لئے اسکول چھوڑنے پر مجبور ہیں۔

امدادی ایجنسیوں نے خبردار کیا ہے کہ شام کے بڑھتے ہوئے معاشی اور کرنسی کے بحران نے مزید بچوں کو بچوں کی مزدوری پر مجبور کردیا ہے۔

الجزیرہ کی پریانکا گپتا کی اطلاع ہے

    .



Source link

Leave a Replay

Sign up for our Newsletter